41

وزیراعظم پاکستان کے خصوصی پروگرام کے تحت کلین اینڈ گرین پنجاب فیز ٹو کے لیے جامع پلان تیار

گجرات (پریس ریلیز)وزیراعظم پاکستان کے خصوصی پروگرام کے تحت کلین اینڈ گرین پنجاب فیز ٹو کے لیے جامع پلان تیار کر لیا گیا، فیز ٹو کا آغاز آج سے ہوگا جو چھ ماہ تک جاری رہے گا، کلین اینڈ گرین فیز ٹو کی کامیابی کے لیے کمیونٹی کو بھی شامل کیا جائے گا، ان خیالات کا اظہار ڈپٹی کمشنر سیف انور جپہ نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنرز توقیر الیاس چیمہ، ظہیر لیاقت، اسسٹنٹ کمشنرز، چیف آفیسرز نے شرکت کی. ڈپٹی کمشنر سیف انور جپہ نے کہا کہ کلین اینڈ گرین فیز ٹو کے تحت شہر کی خوبصورتی کیلیے گجرات شہر، تحصیل ہیڈ کوارٹرز اور بڑے قصبوں میں ماڈل روڈز منتخب کی جائیں گی، ان شاہراہوں کے مکینوں اور کاروباری افراد کو آگاہی دی جائے کہ اپنے علاقوں کو صاف رکھا جائے، آگاہی کے باوجود کچرا پھینکنے والوں کے خلاف لوکل گورنمنٹ ایکٹ کے تحت چالان اور مقدمات درج کئے جائیں. انہوں نے واضع کیا کہ گرین بیلٹس پر کسی قسم کی تعمیرات کی ہر گز اجازت نہیں دی جا سکتی. ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ فیز ون میں جن  سڑکوں، چوراہوں، پارکوں، گرین بیلٹس پر کام کیا گیا تھافیز ٹو کی ابتداء میں انکی نوک پلک درست کی جائے، سٹرکوں پر لگے پرانے فلیکس اور بینرز اتروا دیے جائیں، سٹریٹ لائٹس درست کی جائیں. ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ حکومت پنجاب کی ہدایات کے مطابق فیز ٹو کے لیے مزید سینٹری ورکرز بھرتی کئے جائیں گے، میونسپل کارپوریشن اور کمیٹیوں کی طرف سے خریدی جانیوالی نئی مشینری سے خدمات کا معیار بہتر بنانے میں مدد ملے گی. انہوں نے ہدایت کی کہ جی ٹی روڈ سے منسلک کاروبار کرنے والے افراد، دوکان داروں، ریڑھی بانوں سے کہا جائے کہ وہ اپنے کاروبار کی جگہ پر کوڑا کرکٹ کیلیے کوڑا دان رکھیں، ٹوٹے پھوٹے شیڈز اتارے جائیں، گزشتہ مہم کے دوران لگائے جانے والے پودوں کی دیکھ بھال کی جائے، ریڑھیوں کے لیے حدود مقرر کی جائیں. ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ ایجوکیشن اور ہیلتھ مراکز کے بعد کوئی بینر، فلیکس نہیں ہونا چاہیے، اگر کسی ادارے کے ساتھ فلتھ ڈپو بنا ہو تو اسکی نشاندہی کی جائے، سرکاری دفاتر پر خوبصورت قومی پرچم ہونا چاہیے

اپنا تبصرہ بھیجیں