گجرات (پ ر) پنجاب حکومت کے ای روزگار ٹریننگ پروگرام گجرات کے سنٹر انچارج علی مرتضیٰ نے صدر گجرات پریس کلب عبدالستارمرزا نے ملاقات کی اور انہیں صوبائی حکومت کی جانب سے بے روزگار نوجوانوں کو روزگار کے مواقع فراہم کیلئے شروع کیے جانیوالے ای روز گار ٹریننگ پروگرام کے حوالے سے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ضلع گجرات میں بے روزگاروں کو روزگار دینے کی غرض سے ای روزگار ٹریننگ پروگرام کے تحت گزشتہ 4سالوں میں 1ہزار سے زائد گرایجویٹ  مستفید ہو چکے ہیں جو مجموعی طور پر 35ہزارڈالر سے زائد کما چکے ہیں گجرات یونیورسٹی میں جاری ٹریننگ سیشن حکومت پنجاب کا ایک مستحسن اقدام ہے جہاں ہر تین ماہ بعد نئے مرحلے میں داخلوں کا آغاز کیا جاتا ہے   سنٹر انچارج علی مرتضیٰ نے کہا کہ ای ٹریننگ روزگار کے حوالے سے نوجوان نسل میں مزید آگاہی پیدا کرنے کیلئے گجرا ت پریس کلب کردار ادا کرے  اس پروگرام کامقصد قابل اور اہل نوجوانوں کو بر سر روزگار بنانا ہے تاکہ وہ گھر بیٹھ کر آئی ٹی انڈسٹری سے استفادہ حاصل کر کے نہ صرف باعزت روزگار کمانے کے قابل بن سکیں بلکہ ملکی ریونیو میں اضافہ کابھی باعث بنیں اس پروگرام میں مختلف یونیورسٹیوں سے فارغ التحصیل نوجوانوں کی شمولیت کو یقینی بنایا جارہا ہے تاکہ حکومت نے یہ جو مفت سہولت فراہم کی ہے اس سے نوجوان زیادہ سے زیادہ مستفید ہو ں بے روزگار طلباء اس سہولت سے فائدہ حاصل کرتے ہوئے اپنے آپ کو رجسٹرڈ کروائیں اور گھر بیٹھ کر اپنا روزگار شروع کریں جسکا ثبوت صوبہ پنجاب میں اس پروگرام سے35ہزار سے زائدد نوجوان کا استفادہ حاصل کرنا ہے جو 3.5 ارب روپے سے زائد کا زر مبادلہ کما چکے ہیں۔ ای روزگار پروگرام میں داخلے کیلئے کم از کم 16 سالہ تعلیم ضروری ہے انہوں نے کہا کہ ای روزگار پروگرام میں 25نومبر تک داخلوں کا آغاز جاری ہے۔ایسے خواہش مند تعلیم یافتہ اور بے روزگار شہری جو فری لانسنگ کے ذریعے پیسے کمانا چاہتے ہیں وہ مفت تربیت حاصل کرنے کے لیے درج ذیل ویب سائیٹ www.erozgaar.pitb.gov.pk پر اپلائی کر سکتے ہیں سنٹر انچارج علی مرتضیٰ نے کہا کہ ای ٹریننگ روزگار کے حوالے سے نوجوان نسل میں مزید آگاہی پیدا کرنے کیلئے گجرا ت پریس کلب کردار ادا کرے اس موقع پر صدر گجرات پریس کلب عبدالستارمرزا نے انہیں ہر ممکن تعاون کا یقین دلاتے ہوئے کہا کہ ضلع بھر میں بے رزوزگارپڑھے لکھے نوجوانوں میں شعور بیدار کرنے کیلئے گجرا ت پریس کلب ہر ممکن کردار ادا کریگا تاکہ نئی نسل کار آمد شہری بھی بن سکے اورباعزت روزگار بھی کما سکے۔

By admin

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔